Tasawwuf Advertisement 2024

قومی خبریں

خواتین

انڈونیشیا میں ٹھنڈے لاوے کے سیلاب سے 52 ہلاک، 17 لاپتہ

قدرتی آفات کے سبب3,000 سے زیادہ افراد اپنا گھر بار چھوڑنے اور محفوظ مقامات پر پناہ لینے پر مجبور

جکارتہ: انڈونیشیا کے مغربی سماترہ صوبے میں ٹھنڈے لاوے کے سیلاب سے 52 افراد ہلاک اور 17 لاپتہ ہیں۔مقامی ڈیزاسٹر ایجنسی کے ایک سینئر اہلکار نے آج یہ معلومات دی۔صوبائی ڈیزاسٹر مینجمنٹ اور مٹیگیشن ایجنسی کے بحالی اور تعمیر نو کے یونٹ کے سربراہ الہام وہاب نے کہا کہ لاپتہ افراد کی تلاش کا کام آج دوبارہ شروع کر دیا گیا ہے۔ آپریشن میں مدد کے لیے جائے وقوعہ پر بھاری مشینری کے آلات کو تعینات کیا گیا ہے۔انہوں نے کہا کہ اب ملنے والی لاشوں کی تعداد 52 ہے اور لاپتہ افراد کی تعداد 17 ہے۔ یہ اعداد و شمار بدلتے رہیں گے۔ “لوگ اپنے خاندان کے لاپتہ افراد کی رپورٹ دیتے رہیں گے۔
وہاب نے کہا کہ ہنگامی امدادی کوششوں کے بعد تعمیر نو اور بحالی کا پروگرام جاری کیا جائے گا۔انہوں نے کہا کہ ماہرین اس بات پر غور کریں گے کہ کیا خطرناک علاقوں میں رہنے والے باشندوں کو منتقل کرنا ضروری ہے، جیسے کہ دریاؤں کے کناروں پر جن کا اوپری راستہ مارپی آتش فشاں اور سنگلانگ آتش فشاں کی ڈھلان پر ہے۔نیشنل ڈیزاسٹر مینجمنٹ اینڈ مٹیگیشن ایجنسی کے سربراہ لیفٹیننٹ جنرل سہاریانتو کے مطابق قدرتی آفات کے سبب3,000 سے زیادہ افراد اپنا گھر بار چھوڑنے اور محفوظ مقامات پر پناہ لینے پر مجبور ہیں۔

No Comments:

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *