Tasawwuf Advertisement 2024

قومی خبریں

خواتین

نوکری کے بدلے زمین کےمعاملے میں رابڑی اور میسا کوضمانت

عدالت کی جانب سے ایک لاکھ روپے کے مچلکے پر اگلی تاریخ تک راحت

نئی دہلی: بہار کی سابق وزیر اعلیٰ رابڑی دیوی، آر جے ڈی کی رکن پارلیمنٹ میسا بھارتی اور ہیما یادو جمعہ کو ریلوے میں نوکری کے بدلے زمین لینے کے مبینہ گھوٹالہ سے متعلق کیس میں راؤز ایونیو کورٹ میں پیش ہوئیں۔ رابڑی دیوی، میسا بھارتی اور ہیما یادو کی جانب سے ضمانت کی درخواست دائر کی گئی تھی۔ عدالت نے ایک لاکھ روپے کے مچلکوں پر اگلی تاریخ تک عبوری ضمانت منظور کر لی۔ کیس کی اگلی سماعت 28 فروری کو ہوگی ، جس میں عدالت ملزمان کی باقاعدہ ضمانت پر سماعت کرے گی۔رپورٹ کے مطابق عدالت نے ای ڈی سے پوچھا کہ کیا امت کتیال کے علاوہ کسی اور کو بھی اس معاملے میں گرفتار کیا گیا ہے۔ عدالت کے سوال پر ای ڈی نے کہا کہ صرف امت کتیال کو ہی گرفتار کیا گیا ہے۔امت کتیال نے ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعے عدالت میں حاضری لگائی۔
خیال رہے کہ عدالت میں یہ سماعت منی لانڈرنگ کیس کے سلسلے میں چل رہی ہے، جو ریلوے میں ملازمت کے بدلے میں زمین حاصل کرنے کے مبینہ گھپلے سے متعلق ہے۔ ای ڈی نے اس معاملہ میں 30 جنوری کو بہار کے سابق نائب وزیر اعلی تیجسوی یادو سے بھی پوچھ گچھ کی تھی۔انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ (ای ڈی) نے پہلے لالو یادو اور پھر تیجسوی یادو سے بھی پوچھ کی تھی۔
تیجسوی یادو 30 جنوری کو پوچھ گچھ کے لیے پٹنہ کے بینک روڈ پر واقع ای ڈی کے دفتر پہنچے تھے، پوچھ گچھ کے بعد وہ تقریباً 8 بجے ای ڈی کے دفتر سے باہر آئے، انہوں نے اپنے حامیوں کو فتح کا نشان دکھایا، اس دوران حامیوں نے نعرے بازی بھی کی۔ اس دوران ان کی بہن میسا بھارتی نے کہا کہ انہیں امید ہے کہ انصاف ملے گا۔

No Comments:

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *