Tasawwuf Advertisement 2024

قومی خبریں

خواتین

ممبئی کی کسی بھی مسجد سے کسی سیاسی جماعت کی حمایت کا اعلان نہیں کیا گیا

ائمہ مساجد اور علماء کی جانب سے راج ٹھاکرے کے الزام کی شدید الفاظ میں تردید

ممبئی: ممبئی میں ائمہ مساجد اور عللماء راج ٹھاکرےکے اس بیان کو بے بنیاد اورانتہائی گمراہ کن قرار دیا ہے جس میں انہوں نے کہا ہے کہ ممبئ کی مساجد سے انڈیا اتحاد کے حق میں فتویٰ جاری کیے جا رہے ہیں۔واضح ہو کہ پُنے میں انتخابی ریلی سے خطاب کرتے ہوئے راج ٹھاکرے الزام لگایا ہےکہ مولوی مہا وکاس اگھاڑی کے امیدواروں کو ووٹ دینے کے لیے مسلم کمیونٹی کو فتوےجاری کر رہے ہیں۔ “انوں نے کہا تھا اگر مساجد سے ایسے فتوے جاری ہو رہے ہیں تو آج وہ بھی یہ فتویٰ جاری کر رہے ہیںکہ ہمارےہندو بھائیو، بہنو اور ماؤں کو بی جے پی، ایکناتھ شندے کی شیو سینا اور اجیت پوار کی این سی پی کے امیدواروں کو ووٹ دینا چاہیے۔راج ٹھاکرئے کے بیان کی سخت لفظوں میں مذمت کرتے ہوئے آل انڈیا سنئ علماء و ائمہ مساجد کے صدر و خطیب وامام ہندوستانی مسجد بائکلہ مولانا عبدالجبار ماہرالقادری نے اسے بے بنیاد ، گمراہ کن قرار دیا۔ انھوں نے کہا کہ ، مساجد سے کسی بھی سیاسی پارٹی کی حمایت نہیں کی گئ اور نہ ہی کی جائیگی البتہ مصلیانِ مساجد کو ووٹ کی افادیت و اہمیت سے روشناس کرایا جا رہا ہے اور انہیں ووٹ ڈالنے کی تلقین کی جا رہی ہے۔وہ اپنی مرضی کے مالک ہے جسے چاہے ووٹ دیں نیز ان کو یہ مشورہ بھی دیاگیا کہ مصلیان مع اہل وعیال اپنے جمہوری حق رائے دیہی کا استعمال کریں تاکہ ملک میں جمہوریت قائم رہے اور دستورہند کو ختم کرنے کے جو اشارے دیے جا رہے ہیں اس پر قدغن لگے۔
اس ضمن میں ممبئ کی تاریخی جامع مسجد کے ٹرسٹی شعیب خطیب نے بھی راج ٹھاکر ے کے بیان کو بے بنیاد اور دو سماجوں کے درمیاں تفرقہ پیدا کرنے والا بتاتے ہوئے شدید مذمت کی۔انھوں نے کہا کہ موجود حکومت اور ان کے حمایتی اپنی ہار کو دیکھتے ہوئے بوکھلا گئے ہیں اور اسی طرح کے جھوٹے بیانات دے کر عوام کو گمراہ کر رہے ہیں۔ انکی کوشش ہے کہ کسی طرح وہ یہ انتخاب جیت جائیں، لیکن عوام اب باشعور اور سمجھ دار ہو گئے ہیں اور وہ ان فرقہ پرستوں کےبہکاوں میں ہرگز نہیں آنے والے ہیں۔راج ٹھاکرے کے اس بیان کو لیکر پورے مہاراشٹر میں ناراضگی کا اظہار کیا جا رہاہے۔ مہاراشٹر کے مراٹھواڑہ علاقے کے اضلاع میں اس بیان کی مذمت کی جارہی ہے۔مختلف جماعتوں اور تنظیموں کی جانب سے اس بیان پر برہمی کا اظہار کیا گیا ہے۔ بیڑ ضلع میں جماعت اسلامی کے سید شفیق ہاشمی نے راج ٹھاکرے کے اس بیان کو شر انگیز قرار دیا۔انھوں نے کہا کی مفاد پرست سیاست داں اپنے مقصد کے حصول کے لیے نیچلی ترین سطح پر جا رہے ہیں۔ اور جان بوجھ کر سماج میں انتشار اور بے چینی کی فضا قائم کر رہے ہں۔ انھوں نے مزید کہا کہ اس بیان کی نہ صرف شدید مذمت کی جانی چاہئے بلکہ قاتونی طور پر بھی اس بے ہودہ بیان کا نوٹس لیا جانا چاہئے۔

No Comments:

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *